بہار- جھارکھنڈ

بہار: ڈی ایم سی ایچ میں بند پڑا ہے وائرولوجی لیب، کورونا کی جانچ متاثر

بہار کے بڑے اسپتالوں میں شمار دربھنگہ میڈیکل کالج اور اسپتال (ڈی ایم سی ایچ) کے وائرو لوجی لیب میں مختلف اقسام کے وائرس کی جانچ کیلئے جدید مشینوں کے ہونے کے باوجود کورونا (کووڈ 19) کی جانچ متاثر ہے۔

دربھنگہ میڈیکل کالج اور اسپتال کے مائیکرو بایو لوجی شعبہ کے شعبہ وائرو لوجی لیب کو بنے ہوئے سالوں ہوگئے۔ لیب میں ضرورت کیلئے تمام مشینیں بھی دستیاب ہیں لیکن یہاں کٹ کی کمی اور تربیت یافتہ عملوںکے فقدان میں زیادہ ترمشینیں سفید ہاتھی ثابت ہو رہے ہیں۔ کورونا وائرس سمیت دیگر وائرس کی جانچ کیلئے وائرولوجی لیب میں چار ریئل ٹائم پی سی آر (آر ٹی پی سی آر) مشینیں دستیاب ہیں۔ ملک میں کورونا وائرس کولیکر بنائے گئے 58 کلیکشن سینٹر کی فہرست میں دربھنگہ میڈیکل کالج کے مائیکرو بایو لوجی شعبہ کانام دسویں مقام پر ہے لیکن یہاں جانچ کیلئے کٹ اور تربیت یافتہ عملوں کے نہیں ہونے کی وجہ سے کوڈ و19 وائرس کی جانچ کیلئے مشتبہ مریضوں کا سیمپل پٹنہ کے راجندر میڈیکل ریسرچ انسٹی چیوٹ بھیجنا پڑرہا ہے۔

دریں اثناء ڈی ایم سی ایچ کے پرنسپل ڈاکٹر ایچ این جھا نے وائرو لوجی شعبہ میں آر ٹی پی سی آر مشین ہونے کی جانکاری ملنے پر مائیکرو بایو لوجی شعبہ کے دو ٹیکنیشین کو ٹریننگ کیلئے لکھنﺅ کے آئی سی ایم آر مرکز بھیجنے کی ہدایت دی ہے۔ وہیں مائیکرو بایو لوجی شعبہ کے صدر ڈاکٹر آر ایس پرساد نے بتایاکہ وائرولوجی لیب میں 4 آر ٹی پی سی آر مشین ہے یہاں کے دو ٹیکنیشین کو ٹریننگ کیلئے آج ہی لکھنﺅ بھیجا گیا ہے۔

ضلع مجسٹریٹ ڈاکٹر تیاگ راجن ایس ایم کا کہنا ہے کہ دربھنگہ میں سیمپل کلیکشن سینٹر کو شروع کیا جائے گا۔ بشرطیکہ حکومت بہار اور حکومت ہند مشین کو قابل استعمال مانے۔ غورطلب ہے کہ سال 2013 میں قریب پانچ کروڑ روپے کی لاگت سے اسپتال میں وائرو لوجی لیب کی تعمیر کاکام کیا گیا تھا۔ یہ لیب ملک کے گنے چنے بی ایس ایل گریڈ 3 لیب میں شامل ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close