بہار- جھارکھنڈتازہ ترین خبریں

بہار میں بارش کا قہر جاری، 27 افراد کی موت، حکومت نے مرکز سے کیا ہیلی کاپٹر طلب

بہار میں گذشتہ اڑتالیس گھنٹوں سے مسلسل ہورہی بارش سے جہاں قریب 27 لوگوں کی موت ہوگئی وہیں ریاستی حکومت نے راحت اور بچا]؟[ کام کیلئے مرکز سے فضائیہ کے دو ہیلی کاپٹر مہیا کرانے کی درخواست کی ہے۔

دار الحکومت پٹنہ کے لوگوں کو آج صبح سے بارش نہیں ہونے سے سے تھوڑی راحت ملی ہے لیکن ابھی بھی آسمان میں آفت کے بادل چھائے ہوئے ہیں۔ محکمہ موسمیات نے بہار میں 24 گھنٹے تک بارش سے نجات نہیں ملنے کی پیشن گوئی کی ہے۔ آفات محکمہ کے پرنسپل سکریٹری پرتیہ امرت نے بتایاکہ پٹنہ کے راجندر نگر علاقے میں مختلف ہاسٹلوں میں رہنے والے طلباؤطالبات کے علاوہ یہاں کے نشیبی علاقوں میں رہنے والوں رہنے والوں کو محفوظ مقامات پر پہنچادیاگیا ہے۔

انہوں نے بتایاکہ زیر آب علاقوں میں این ڈی آر ایف اور ایس ڈی آر ایف کی ٹیموں کو تعینات کیا گیاہے۔ مسٹر امرت نے بتایاکہ پٹنہ کے چھ مقامات پر سودھا دودھ کی مستقل دستیابی کو یقینی بنایا گیا ہے۔ ساتھ ہی پینے کے پانی کیلئے 50 ٹینکر لگائے گئے ہیں۔ چھ اسکولوں میں راحتی کیمپ چلائے جارہے ہیں جہاں متاثرین کو کھانا مہیا کرایاجارہاہے۔ پٹنہ نگر نگم کے کرین سے زیر آب علاقوں میں بچا کام کئے جارہے ہیں۔ آبی جما کی وجہ سے کئی افراد بغیر بجلی اور پانی کے اپنے۔ اپنے گھروں میں رہنے پر مجبور ہیں۔

یکم اکتوبر تک سبھی سرکاری اور پرائیوٹ اسکولوں کو بند رکھا گیا ہے۔ بارش کے قہر سے بہار میں اب تک قریب 27 لوگوں کی اموات ہو چکی ہیں۔ ریاست کے متاثرہ علاقوں میں راحت اور بچا کام کیلئے این ڈی آر ایف اور ایس ڈی آر ایف کی 19 ٹیمیں تعینات کی گئی ہیں۔ وہیں پٹریوں کے پانی میں ڈوبنے اور پلوں کے خراب ہونے کی وجہ سے کئی ٹرینوں کو رد کر دیا گیا ہے اور کئی ٹرینیں روٹ تبدیل کر کے چلائی جارہی ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close