تازہ ترین خبریںمسلم دنیا

بنگلہ دیش: فیس بْک پر توہین آمیز پوسٹ کے خلاف ہنگامہ، 4 افراد ہلاک، 50 زخمی

بنگلہ دیش میں فیس بْک پر ایک توہین آمیز پوسٹ کے خلاف احتجاجی مظاہرے کے دوران میں چار افراد ہلاک اور کم سے کم پچاس زخمی ہوگئے ہیں۔

حکام کے مطابق بنگلہ دیش کے جنوبی ضلع بھولا میں اتوار کو پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپ ہوئی ہے۔مشتعل مظاہرین فیس بْک پر ایک ہندو کی توہین آمیز پوسٹ کے خلاف احتجاج کر رہے تھے۔ اس ہندو نے مبیّنہ طور پر پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ وسلم کی شان اقدس کے خلاف توہین آمیز کلمات پوسٹ کیے تھے۔ اس پر علاقے کے مسلمانوں میں اشتعال پھیل گیا اور وہ احتجاج کے لیے سڑکوں پر نکل آئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ فیس بْک کی ویب سائٹ کو ہیک کر لیا گیا تھا اور تمام ہیکروں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ دارالحکومت ڈھاکا سے 195 کلومیٹر دور واقع ضلع بھولا کے سپرنٹنڈنٹ پولیس سرکار محمد قیصر کا کہنا ہے کہ ”مظاہرے میں شریک بعض لوگوں نے ہمارے افسروں پر پتھراؤ شروع کردیاتھا۔ اس کے جواب میں ہم نے اپنے دفاع میں خالی گولیاں چلائی تھیں اور پولیس افسر ایک عمارت میں پناہ لینے پر مجبور ہوگئے تھے۔“

انھوں نے جھڑپ کے دوران میں چار افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور بتایا ہے کہ ایک پولیس اہلکار بھی گولی لگنے سے زخمی ہوگیا ہے۔ ضلع بھولا میں امن وامان کی بگڑتی ہوئی صورت حال پر قابو پانے کے لیے سرحدی محافظوں اور پولیس کی اضافی نفری روانہ کردی گئی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close