اترپردیشتازہ ترین خبریں

بلرامپور کے 55 گاؤں سیلاب کی زد میں

نیپال کی سرحد سے منسلک اترپردیش کے ضلع بلرامپور میں گذشتہ کچھ دنوں سے ہو رہی بارش اور پہاڑی نالوں میں طغیانی کی بدولت تقریبا 55 گاوں سیلاب کی زد میں ہیں۔

ضلع انتظامیہ نے سیلاب میں پھنسے لوگوں کو بحفاظت نکالنے اور انہیں محفوظ مقام پر پہنچانے کے لئے ایس ڈی آر ایف کی دو ٹیمیں بلائی ہیں۔ سیلاب کی زد میں آنے سے دولوگوں کی موت ہوچکی ہے۔ سیلاب کے پانی کی وجہ سے تلسی پور، مہاراج گنج، پچپیڑوا، گورا کو جانے والی سڑک بند ہوگئی ہے۔

بارش اور پہاڑی نالوں میں طغیانی کی وجہ سے بلرامپور صدر اور تلسی پور تحصیل علاقے کے تقریبا 55 گاؤں سیلاب کی زد میں ہیں۔ پہاڑی نالوں کے راستے میں آنے والی اکثر سڑکیں و پلیا ٹوٹ گئی ہیں۔ سیکڑوں ہیکٹر فصلیں تباہ ہوگئی ہیں۔ لوگ جان خطرے میں ڈال کر تین چار فٹ گہرے پانی میں اتر کر راستہ عبور کرنے کو مجبور ہیں۔ اسکولوں میں پانی بھرنے کی وجہ سے بچوں کی پڑھائی بند ہے۔ عام زندگی مفلوج ہوتی جارہی ہے۔

ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ کرن کرونیش نے جمعرات کو بتایا کہ فیض آباد سے 24 کشتیاں منگائی گئی ہیں جو دو ماہ تک پہاڑی نالوں کی پلیا و ڈپ کے دونوں کنارے کھڑی رہے گی انہوں نے بتایا کہ ایس ڈی آر ایف کی 2 ٹیمیں بلا کر تلسی پور اور بلرامپور تحصیل کے علاقوں میں تعینات کیا گیا ہے۔

ضلع کے 16 باندھوں کا معائنہ کرایا گیا ہے اور پائی گئی خامیوں کو دور کیا جارہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ تقریبا 50 گاؤں اس کی زد میں ہیں اور متاثر افراد کی ہر ممکن مدد کی جارہی ہے۔ ان کے مطابق 24 گھنٹوں کے اندر پانی سطح میں کمی آنے کے امکانات ہیں۔ انہوں نے لوگوں سے سیلاب کے پانی سے محتاط رہنے کی اپیل کی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close