تازہ ترین خبریںدلی نامہ

’ایک ہندوستان، بہترین ہندوستان‘ کی تھیم پر منعقد ہوں گے’ہنرہاٹ‘

عالمی تجارتی میلے میں مرکزی وزیر مختار عباس نقوی اور مرکزی وزیر مملکت کرن رجیجو نے کیا ’ہنر ہاٹ‘ کا افتتاح

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
پرگتی میدان میں لگے 39ویں عالمی تجارتی میلے2019 میں مرکزی وزارت اقلیتی امور کی جانب سے سجائے گئے ’ہنر ہاٹ‘کا افتتاح آج مرکزی وزیر اقلیتی امور مختار عباس نقوی اور مرکزی وزیر کھیل اور مرکزی وزیر مملکت اقلیتی امورکرن رجیجوکے ہاتھوں عمل میں آیا۔بین اقوامی تجارتی میلے میں 14نومبر سے 27 نومبر تک ہال نمبر 7میں سجے’ہنر ہاٹ‘ کے افتتاح کے موقع پر مرکزی وزارت اقلیت کے سکریٹری پر مود کمار داس، این ایم ڈی ایف سی کے چیئر مین اور منیجنگ ڈائرکٹر شاہباز علی سمیت وزارت کے دیگر سینئر افسران موجود تھے۔ اس ہنر ہاٹ میں ملک بھر سے فن دست کاری کے ہنر مندا ستاد اور خواتین دستکار شرکت کرہے ہیں۔

افتتاحی تقریب سے خطاب کر تے ہوئے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہاکہ 2019اور 2020میں منعقد کئے جا نے والے تمام ہنر ہاٹ ’ایک ہندوستان، بہترین ہندوستان‘ کی تھیم پر منعقد ہوں گے۔ دہلی کے بعد اگلا ہنر ہاٹ ممبئی میں 20سے 31دسمبر تک منعقد کیا جا ئے گا۔ انہوں نے کہاکہ ہنر ہاٹ ملک بھر کے دستکاروں، کاریگروں، ہنر مندوکو حوصلے کا ہب بن گیا ہے۔ ہنر ہاٹ دستکاروں ہنر مندوں کا ’امپاورمنٹ ایکسچینج اور امپلائمنٹ ایکسچینج‘ ثابت ہوا ہے۔ جس سے ان کو رو ز گار کے موقعہ اور مارکیٹ فراہم ہو رہے ہیں۔

مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہاکہ آئندہ 5 برسوں میں وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت والی حکومت ہنر ہاٹ کے ذریعہ لاکھوں ہنر کے استاد کا ریگروں اور دستکاروں اور روایتی خانساماؤں کو روز گار اور روزگار کے موقع مہیا کرائے گی۔ وزیر موصوف نے کہاکہ اقلیتی وزارت کی جا نب سے ملک کے مختلف مقامات پر منعقد کئے جا رہے ہنر ہاٹ میں جہاں ایک طرف لاکھوں لوگ آ کر کاریگروں، دست کاروں کی حوصلہ افزائی کر رہے ہیں، وہیں ہر ہنر ہاٹ میں دستکاروں کے ہاتھ سے تیار نایاب مصنوعات کی کروڑوں روپے کی فروخت بھی ہو رہی ہے۔ دست کاروں کے ساتھ ساتھ ان میں سے ہر ایک کاریگر اور دستکار سے منسلک تقریبا 100 لوگوں کو روزگار کے مواقع حاصل ہو رہے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ مودی حکومت کے دوسری مدت کے 5 سالوں میں دست کاروں،کا ریگروں کے سودیشی ہنر کو مارکیٹ کی ضروریات کے مطابق تراشنے اور حوصلہ افزائی کیلئے مرکزی اقلیتی وزارت تمام ریاستوں میں ہنر ہب قائم کر نے کے مشن پر تیزی سے کام کر رہی ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ مودی حکومت 2 کے پہلے 100 دنوں میں ہی اقلیتی امور کی وزارت نے ملک کے مختلف حصوں میں 100 ہنرہب‘ قائم کر نے کی منظوری دی ہے۔ ان ہنر ہب میں ہنر مند دستکاروں، روایتی کھانساماؤں کو موجودہ ضروریات کے مطابق تربیت دی جائے گی اور ان کے ہنر کو مزید نکھارا جا ئیگا۔

انہوں نے کہاکہ پچھلے 3 سالوں میں ملک کے مشہور معاشی مراکز میں ایک درجن سے زیادہ ہنر ہاٹ کے ذریعہ 2 لاکھ 50 ہزار سے زائد کاریگروں،دستکا روں اورخانساماؤں ور ان سے وابستہ لوگوں کو روزگار اور روزگار کے مواقع فراہم کئے ہیں۔جن میں خواتین دستکاروں کی ایک بڑی تعداد بھی شامل ہے۔وزیر موصوف نے بتا یا کہ اس تجارتی میلے میں منعقدہ ہنر ہاٹ میں دستکار کا ریگرملک کی مختلف ریاستوں آندھراپردیش، یوپی، جموں و کشمیر، جھارکھنڈ، مغربی بنگال، بہار اور دیگر ریاستوں سے ہاتھوں سے تیار کردہ نایاب سامان لائے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ آنے والے دنوں میں ہنر ہاٹ کا انعقاد گروگرام، بنگلورو، چنئی، کولکتہ، لکھنؤ، احمد آباد، دہرادون، پٹنہ، اندور، بھوپال، ناگپور، رائے پور، حیدرآباد، پڈوچیری، چنڈی گڑھ، امرتسر، جموں، شملہ، گوا، کوچی، گوہاٹی، رانچی، بھوبنیشور، اجمیر وغیرہ میں کیا جائے گا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close