آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

ایران کے تیل ٹینکر کی رہائی میں امداد کرے گا برطانیہ

برطانیہ نے ایرانی تیل ٹینکر گریس -1 کی رہائی میں ا مداد کرنے کا اعلان کیا ہے۔ برطانیہ نے کہا ہے کہ اگر ایران اس بات کی ضمانت دیتا ہے کہ آئل ٹینکرشام نہیں جائے گا تو وہ اس کی رہائی میں امداد کرے گا۔ جبرالٹر نے ایران پر عائد یورپی یونین کی پابندیوں کے پیش نظر چار جولائی کو تیل ٹینکر کو قبضے میں لیا تھا۔

برطانیہ کے وزیر خارجہ جیریمی ہنٹ نے ہفتہ کو ایران کے وزیر خارجہ محمد جاوید جریف سے اس معاملے پر فون پر بات کی۔ مسٹر ہنٹ نے ٹویٹر پر لکھا کہ انہوں نے ایران کے وزیر خارجہ سے بات کی جو کہ مثبت رہی۔ برطانیہ کے وزیر خارجہ نے کہا“میں نے انہیں اپنے خدشات سے آگاہ کیا اور یقین دلایا کہ اگر ایران اس بات کی ضمانت دیتا ہے کہ تیل ٹینکر شام نہیں جائے گا تو وہ اس کی رہائی میں ا مداد کرے گا۔ سپین کے وزیر خارجہ جوزف بوریل نے دعوی کیا ہے کہ ایران کے تیل برآمدات کو مکمل طور پر روکنے کی کوشش کے تحت امریکہ کی درخواست پر تیل ٹینکر کوضنط کیا گیا ہے۔

گذشتہ ہفتے ایران نے بین الاقوامی جوہری معاہدے کے تحت یورینیم اضافہ کی طے شدہ حد کو پار کر لیا ہے۔ ایران نے 3.67 فیصد کی طے شدہ حد سے تجاوز کر اپنا یورینیم اضافہ 4.5 فیصد تک کر لیا ہے۔ واضح ر ہے کہ خلیج عمان میں گذشتہ ماہ آبنائے ہومز کے نزدیک دو تیل ٹینکروں الٹیراور کوکوکا کریجیس میں دھماکے کے واقعہ اور ایران کی طرف سے امریکہ کے خفیہ ڈرون طیارے کو مار گرانے کے بعد سے دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی عروج پر پہنچ گئی ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ سال مئی میں ایران جوہری معاہدے سے علیحدہ ہونے کا اعلان کیا تھا۔ اس کے بعد سے ہی دونوں ممالک کے تعلقات بہت ہی تلخ ہو گئے ہیں۔ واضح ر ہے کہ سال 2015 میں ایران نے امریکہ، چین، روس، جرمنی، فرانس اور برطانیہ کے ساتھ ایک معاہدے پر دستخط کئے تھے۔ معاہدے کے تحت ایران نے اس پر عائد اقتصادی پابندیوں کو ہٹانے کے بدلے اپنے جوہری پروگرام کو محدود کرنے پر اتفاق ظاہر کیا تھا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close