اترپردیشتازہ ترین خبریں

اکھلیش کی پریاگ راج میں ’نو انٹری‘، ایس پی حامیوں کا اسمبلی سے سڑک تک ہنگامہ

سماجوادی پارٹی (ایس پی) سربراہ اکھلیش یادو کو سیکورٹی وجوہات کا حوالہ دیتے ہوئے پریاگ راج جانے سے روکے جانے پر ایس پی حامیوں نے اسمبلی سے سٹرک تک ہنگامیہ کرکے حکومت کے خلاف اپنا احتجاج درج کرایا۔

مسٹر یادو کو منگل کو اموسی ائیرپورٹ پر سیکورٹی اہلکار نے اس وقت رروک لیا جب وہ الہ آباد یونیورسٹی میں ایس پی کی حمایت یافتہ طلبا یونین کے ایک پروگرام میں شرکت کرنے کے لئے پریاگ راج جارہے تھے۔ اس دوران سابق وزیر اعلی اور ان کے حامیوں کی سیکورٹی اہلکار کے ساتھ نوک۔جھونک اور دھکا مکی ہوئی۔

ایس پی سربراہ کے ائیر پورٹ پر روکے جانے کی اطلاع ملتے ہی اسمبلی اور ودھان پریشد میں ایس پی اراکین نے زبردست ہنگامہ کیا جس سے ایوان کی کاروائی ملتوی کرنی پڑی۔ وہیں ائیرپورٹ کے باہر اور ایس پی دفتر پر پارٹی حامیوں نے حکومت مخالف نعرے بازی کی اور اسے جمہوریت کا قتل قرار دیا۔

مسٹر یادو نے ٹویٹ کر کہا ’’بغیر کسی تحریری ہدایت کے مجھے ائیر پورٹ پر روک دیا گیا، وجہ دریافت کرنے پر افسران کوئی معقول جواب دینے سے قاصر رہے، طلبا یونین کے پروگرام میں جانے سے روکنے کا واحد مقصد نوجوانوں کے درمیان سماج وادی نظریات اور آواز کو دبانا ہے۔ ایک طلبا لیڈر کے حلف برداری تقریب سے حکومت اتنی خائف ہے کہ مجھے لکھنؤ ائیر پورٹ پر روکا جا رہا ہے‘‘۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close