تازہ ترین خبریںدلی نامہ

انڈیا اسلامک کلچرل سینٹر میں 40روزہ پرسنالٹی ڈویلپمنٹ ورکشاپ جاری

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
انڈیا اسلامک کلچرل سینٹر میں 40 روزہ پرسنالٹی ڈویلپمنٹ ورکشاپ جاری ہے۔ جہاں آج آسام سے ممبر پارلیمنٹ مولانا بدرالدین اجمل ورک شاپ کا مشاہدہ کر نے پہنچے۔ اس موقع پر پروگرام کے کوآرڈنیٹر‘ صحافی ایم ودودساجد نے مولانا بدرالدین اجمل کا استقبال کرتے ہوئے انہیں تعلیمی وتربیتی پروگراموں کی تفصیلات سے واقف کرایا۔

مولانا نے یہ دیکھ کر خوشی کا اظہار کیا کہ شخصیت سازی کی اس چالیس روز ہ ورکشاپ میں پہلی بار سو سے زائد علماء کے لئے ایک مخصوص سیشن رکھا گیا ہے۔ مولانا بدر الدین اجمل نے سینٹر کے ذریعہ جاری تعلیمی وتربیتی پروگراموں کی بھی ستائش کی اور کہا کہ سراج الدین قریشی کی قیادت میں سینٹر ایک شاندار ہندوستان کی تعمیرکے لئے ایک منظم نسل تیار کر رہا ہے۔

طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے مو لانا بدر الدین اجمل نے کہاکہ مسلمانوں کے تمام مسائل کا حل اسلامی تعلیمات پر عمل آوری اور دوسروں کے ساتھ جذبہ خیر خواہی میں پوشیدہ ہے۔ مولانا بدرالدین اجمل نے چار سو طلبہ میں موجود غیرمسلم طلبہ وطالبات کو خصوصی طورپر اسٹیج پر مدعو کیا اور ان میں سے ہر ایک سے پوچھا کہ کیا انہیں یہاں کلاس کرنے کے دوران کسی طرح کے تعصب اور امتیاز یا گھٹن کا احساس ہوا؟۔ تمام غیر مسلم طلبہ وطالبات نے کہا کہ انہیں جو کچھ یہاں آکر ملا ہے اس کی کوئی قیمت نہیں ہے اور یہ کہ اگر وہ یہاں نہ آتے تو ایک بہت بڑی دولت سے محروم ہوجاتے۔

دویا ‘امن سنگھ اور پراچی، امن سنگھ نے کہا کہ ہندوستان کے 90فیصد امن پسند عوام،مسلمانوں کے ساتھ وہ اکیلا محسوس نہ کریں۔ رامز عبدالودود اور حماد عبدالماجد نے شاندار انگریزی میں مولانا بدرالدین اجمل اور ان کے کارناموں پر روشنی ڈالی۔ اس کے علاوہ حسین احمد مدنی‘ مصعب مدنی اور دیگر کئی طلبہ نے مختلف موضوعات پر تقریریں کیں۔ مولانا نے علماء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کے کاندھوں پر بڑی بھاری ذمہ داری ہے‘آپ کو انگریزی پیسہ کمانے کے لئے نہیں بلکہ اشاعت دین کے لئے سیکھنی ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج انگریزی زبان کے بغیر عالمی نقشہ پرکوئی کام نہیں کیا جاسکتا۔ انہوں نے پرسنالٹی ٹرینرمحمدمنور زماں کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ منورزماں اس دور کے ولی ہیں اور ان کے سرپراللہ کا دست شفقت ہے۔قابل ذکر ہے کہ منور زماں ہر برس اجمل فاؤنڈیشن کے تحت چلنے والے تعلیمی اداروں میں ورکشاپ منعقد کرتے ہیں جس سے اب تک سینکڑوں نوجوان فیض یاب ہوچکے ہیں۔ دہلی کے مشہور ایتھلیٹ نوجوان محمد نثار کو بھی انہوں نے نہ صرف تربیت دی ہے بلکہ اس کا مالی اور مادی تعاون بھی کیا ہے۔ اسلامک سینٹر میں جاری اس ورکشاپ کی اختتامی تقریب آئندہ 25 جولائی کو منعقد ہوگی۔ؒٓ

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close