آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

انڈونیشیا میں لینڈ سلائڈنگ اور سیلاب: 12 افراد ہلاک، 15 ہزار لوگ بے گھر

انڈونیشا کی راجدھانی جکارتہ اور بنکلولو صوبہ کے مغربی حصے میں تودہ گرنے سے 12 لوگوں کی موت ہوگئی اور دیگر آٹھ لاپتہ ہوگئے۔ اس کی وجہ سے 15 ہزار لوگوں کو گھر چھوڑ کر دیگر مقامات پر پناہ لینے پر مجبور ہونا پڑا۔

نیشنل ڈیزاسٹر منیجمنٹ ایجنسی کے ترجمان سوتوپو پوروو نگروہو نے بتایا کہ مرنے والے دس لوگوں اور سبھی لاپتہ شخص کا تعلق اسی صوبہ سے ہے۔ ترجمان نے بتایا کہ جکارتہ میں سیلاب کی وجہ سے معاشی سرگرمیاں متاثر نہیں ہوئی ہیں۔ مسٹر سوتوپو نے کہا کہ جمعہ سے اس صوبہ کے لوگوں کو سیلاب اور تودہ گرنے کی مار جھیلنی پڑ رہی ہے۔ اتوار تک زیادہ تر مقامات میں پانی گھٹنا شروع ہوگیا ہے لیکن صوبہ کے زیادہ تر رہائشی علاقے سیلاب کےپانی میں ڈوبےہوئے ہیں۔

ترجمان نے بتایا کہ اس قدرتی آفت سے 184 گھروں، چار اسکولی عمارتوں، سڑکوں، پلوں اور واٹر چینلوں کو نقصان پہنچا ہے۔ ان حادثوں میں دو افراد سنگین طور سے زخمی ہوئے ہیں اور دیگر دو افراد کو معمولی چوٹیں آئیں ہیں۔ واضح رہے کہ انڈونیشا میں زبردست بارش کی وجہ سے سیلاب اور تودہ گرنےکےواقعات میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close