اپنا دیشتازہ ترین خبریں

اننت ناگ مسلح تصادم : حزب المجاہدین کا ڈویژنل کمانڈر سمیت 2 جنگجو ہلاک

سری نگر ، جنوبی کشمیر کے قصبہ اننت ناگ میں بدھ کی صبح جنگجوؤں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان ہونے والے ایک مسلح تصادم میں حزب المجاہدین کے اعلیٰ کمانڈر الطاف کاچرو کے سمیت دو جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا۔ پولیس سربراہ ڈاکٹر شیش پال وید نے کہا کہ مسلح تصادم کے دوران سیکورٹی فورسز کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ قصبہ اننت ناگ کے مونی وارڈ میں جنگجوؤں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان مسلح تصادم بدھ کی علی الصبح قریب پانچ بجے چھڑ گیا۔ کئی گھنٹوں تک جاری رہنے والے مسلح تصادم میں حزب المجاہدین کے دو جنگجوؤں الطاف احمد ڈار عرف الطاف کاچرو ساکنہ ہاوورہ کولگام اور عمر رشید وانی ساکنہ کھڈونی کولگام کو ہلاک کیا گیا۔ الطاف کاچرو حزب المجاہدین کا ڈویژنل کمانڈر تھا۔ وہ اے پلس پلس زمرے کا جنگجو تھا۔ ایک رپورٹ کے مطابق الطاف کاچرو جنوبی کشمیر میں گذشتہ قریب سات برسوں سے سرگرم تھا۔
مسلح تصادم کے مقام پر جنگجوؤں کے حق میں ہونے والے احتجاجی مظاہروں میں متعدد احتجاجیوں کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔ چہرے میں پیلٹ لگنے کی وجہ سے زخمی ہونے والے ایک نوجوان کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ انتظامیہ نے مزید احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر اننت ناگ اور کولگام اضلاع میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات منقطع کروادی ہیں۔ جبکہ ریلوے حکام نے بھی پولیس کی تجویز پر وسطی کشمیر کے بڈگام سے جموں خطہ کے بانہال تک براستہ جنوبی کشمیر چلنے والی ریل خدمات کو معطل کردیا ہے۔
سرکاری ذرائع نے مسلح تصادم کی تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ قصبہ اننت ناگ کے کھنہ بل کے نذدیک واقع مونی وارڈ میں جنگجوؤں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر فوج کی ایک راشٹریہ رائفلز (آر آر)، جموں وکشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ (ایس او جی) اور سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) نے مذکورہ علاقہ میں بدھ کی علی الصبح تلاشی آپریشن شروع کیا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close