آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

امریکہ: پٹسبرگ میں یہودیوں کی عبادت گاہ میں فائرنگ، 11افراد ہلاک

امریکہ کی پٹسبرگ میں یہودیوں کی عبادت کے مقام پر ہونے والی فائرنگ میں کم از کم11 افراد ہلاک ہو گئے۔ یہ اطلاع مقامی میڈیا کے حوالہ سے دی گئی ہے۔

پولیس نےے بتایا کہ فائرنگ کرنے والے مسلح شخص نے ہتھیار ڈال دیئے ہیں۔ پٹسبرگ کے ’ٹری آف لائف سن گانگ‘علاقے میں تلاشی مہم جاری ہے اور مقامی لوگوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایات دی گئی ہیں۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ ’بہت سے لوگ‘ ایک ’اجتماعی قتل کے ناگوار واقعہ‘ میں ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں۔ مشتبہ حملہ آور کی شناخت 46 سالہ شخص رابرٹ بوورز کے نام سے ہوئی ہے، جو زخمی حالت میں ہیں۔پولیس کے مطابق دو مزید شدید زخمیوں کا بھی اسپتال میں علاج کیا جا رہا ہے۔ وفاقی تفتیش کار اس واقعہ کی ’نفرت انگیز جرم‘ کے طور پر تفتیش کر رہے ہیں۔

ایک غیرسرکاری یہودی تنظیم اینٹی ڈیفیمیشن لیگ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’ہمارے خیال میں یہ امریکہ کی تاریخ میں یہودی برادری پر ہونے والا سب سے بڑا مہلک حملہ ہے۔‘‘ پٹسبرگ کے علاقے سکوئرل ہل میں واقع یہودی عبادت گاہ میں عبادت گزار سبات کے لیے جمع تھے۔ اسکوئرل ہل وہ رہائشی علاقہ ہے جہاں ریاست پینسلوینیا میں سب سے زیادہ یہودی آبادی ہے اور ہفتہ کے روز اس عبادت گاہ میں خاصی بھیڑ ہوتی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close