اترپردیشتازہ ترین خبریں

الہ آ با د کے بعد اب مرزا پور کا بھی بد لے گا نام

الہ آباد اور فیض آباد کانام تبدیل ہونے کے بعد بی جے پی کے مقامی لیڈروں اور دیگر ہندو وادی تنظیموں نے مرزا کا نام بدلنے کی مہم تیز کر دی ہے۔ نگر علاقے کے بی جے پی لیـڈر رنتاکر مشر نے ضلع کا نام بدل کر وندھیادھام کرنے کی مہم تیز کردی ہے۔

وہ وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کو اس ضمن میں کئی بار خط لکھ چکے ہیں۔ سابق وزیر اعلی مایاوتی نے مرزا پور کو سرکل ہیڈکواٹر کا درجہ دیاتھا۔ علاقے کی اہمیت اور عوام کے مطالبے کو دیکھتے ہوئے 1998 میں سابق وزیر اعلی کلیان سنگھ نے سرکل ہیڈ کوارٹر مرزا پور کا نام بدل کر وندھیا چل کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ اصل میں ضلع مرزا پورکے لکھاوٹ کے سلسلے میں ہی لمبے عرصے سے تنازعہ چل رہا ہے۔ اس اتفاق کہیں یا لاپرواہی کہ ضلع کانام دو طرح سے لکھا جاتا ہے۔ سرکاری تحریروں میں یہ’’مرزا پور‘‘ لکھا جاتا ہے جبکہ مقامی لوگ’’میرزاپور‘‘ لکھتے ہیں۔ پہلے کو نواب میر جعفر سے جوڑ کر دیکھا جاتا ہے جو غلامی کا مظہر مانا جاتا ہے ۔ حالانکہ کہ مرزا پور کا نام میر جعفر سے جڑا ہے اس کا کوئی دستاویزی ثبوت نہیں ہے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close