تازہ ترین خبریںکھیل کھلاڑی

اسپاٹ فکسنگ معاملہ: سری سنت کو ملی راحت، سپریم کورٹ نے ہٹائی تاعمر پابندی

سپریم کورٹ نے میڈیم فاسٹ بولر ایس سری سنت کو بڑی راحت دیتے ہوئے ان کے خلاف اسپاٹ فکسنگ کے معاملے میں کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی ) کی طرف سے تاحیات پابندی کو جمعہ کو رد کردیا۔

بتا دیں کہ اس کے ساتھ عدالت نے بی سی سی آئی کو اس بات کی ہدایت بھی جاری کی ہے کہ وہ تین مہینے کے اندر اندر سری سنت کے خلاف دوسری مدت کے بارے میں فیصلہ کرے۔ اگرچہ عدالت نے اسپاٹ فکسنگ معاملے میں سری سنت کو بے گناہ نہیں بتایا لیکن اس نے بی سی سی آئی کو سزا کی مدت کو کم کرنے کی ہدایت دی ہے۔

غور طلب ہے کہ سری سنت اس وقت اسپاٹ فکسنگ معاملہ میں ملوث ہونے کی وجہ سے تاعمر پابندی کا سامنا کر رہے ہیں۔ آپ کی جانکاری کے لئے بتا دیں کہ کیرالہ ہائی کورٹ نے سری سنت پر بی سی سی آئی کے ذریعہ لگائی گئی تاعمر پابندی کو برقرار رکھا تھا اور اسی فیصلہ کو سری سنت نے عدالت عظمی میں چلینج دیا تھا۔

حالانکہ تاعمر پابندی کا سامنا کر رہے سری سنت نے اس درمیان فلموں میں بھی ہاتھ پاؤں آزمایا اور ٹی وی ریلٹی شو بگ باس، خطروں کے کھلاڑی جیسے شوز میں حصہ لیا. انہوں نے ٹی وی ریلٹی شو بگ باس میں یہ انکشاف کیا تھا کہ وہ واپس بین الاقوامی میچ کھیلنا چاہتے ہیں اور جس کے لئے انہوں نے سپریم کورٹ میں اپیل بھی کی ہے۔ آج سپریم کورٹ سے سری سنت کے لئے ایک اچھی خبر یہ بھی نکل کر سامنے آئی ہے کہ ان پر لگایا گیا بین الاقوامی کرکٹ بین اب ہٹا لیا گیا ہے، جس سے وہ دوسرے ممالک میں کاؤنٹی کرکٹ کھیل سکیں گے۔ وہ انڈین ٹیم کا حصہ نہیں بن سکتے، لیکن وہ دوسرے ممالک میں جاکر کاؤنٹی میچ کھیل سکتے ہیں۔

ٹیگز
اور دیکھاو

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close