اپنا دیشتازہ ترین خبریں

اروناچل کے وزیر اعلی استعفی دیں: کانگریس

کانگریس نے آج الزام لگایا کہ اروناچل پردیش کے وزیر اعلی پیما كھانڈو کے قافلے کی تلاشی کے دوران منگل کی رات کو نوٹ برآمد ہوئے ہیں ، اس لئے وزیر اعلی کو فوری طورپر استعفی دینا چاہئے۔

کانگریس کی میڈیا سیل کے سربراہ رنديپ سنگھ سورجےوالا نے بدھ کو یہاں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ منگل کی رات مسٹر كھانڈو کے قافلے کی تلاشی ہوئی ہے جس میں چھاپہ مار ٹیم نے 180 لاکھ روپے برآمد کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس دوران مسٹر كھانڈو کے ساتھ نائب وزیر اعلی چاونا مین اور بھارتیہ جنتا پارٹی کے اروناچل پردیش کے صدر تاپیر گاو بھی موجود تھے ۔

انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں دو ویڈیو سامنے آئے ہیں جن سے واضح ہوجاتا ہے کہ قافلہ مسٹر كھانڈو کا ہی تھا۔ بڑی تعداد نوٹوں کی یہ برآمدگی الیکشن کمشنر کی ایكسپنڈيچر آفیسر آبزرور سمرتا کورگل کی موجودگی ہوئی ہے اور اس دوران وہاں پاسيگھاٹ کی ڈپٹی کمشنر کنی سنگھ بھی تھیں۔ اس برآمدگی کی اطلاع ڈپٹی کمشنر پاسيگھاٹ کنی سنگھ اور پولس سپرنٹنڈنٹ پریا رنجن کی طرف سے دی گئی ہے۔ کانگریس کے ترجمان نے کہا کہ اس پورے معاملے میں وزیر اعلی، نائب وزیر اعلی اور بی جے پی کے ریاستی صدر براہ راست ملوث ہیں اور ان کے خلاف مقدمہ دائر کر کے پورے معاملے کی تحقیقات ہو اور وزیر اعلی فوری استعفی دیں۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close