اپنا دیشتازہ ترین خبریں

اجودھیا تنازعہ: سپریم کورٹ کا بڑا فیصلہ، ثالثی ختم، 6 اگست سے ہوگی ہر روز سماعت

اجودھیا کے بابری مسجد۔رام جنم بھومی زمین کے تنازعہ میں ثالثی کا عمل ناکام رہا ہے اور اب چھ اگست سے سپریم کورٹ میں اس مقدمے کی سماعت ہوگی۔

چیف جسٹس رنجن گوگوئی کی صدارت والی پانچ رکنی آئینی بنچ نے کہا کہ اس تنازعہ کو نمٹانے کی غرض سے ثالثی کا عمل ناکام رہا ہے اور اب اس کی باضابطہ سماعت کی جائے گی۔ سپریم کورٹ کے سابق جج ایف ایم آئی کلیف اللہ، سیاسی کارکن مسٹر روی شنکر اور ثالثی امور کے ماہر ایڈوکیٹ شری رام پنچو کی ثالثی کی کمیٹی نے گذشتہ روز آئینی بنچ کے سامنے سیل بند لفافے میں اپنی رپورٹ سونپ دی تھی۔

آئینی بنچ نے رپورٹ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ثالثی کا عمل ناکام رہا ہے۔ چیف جسٹس سمیت آئینی بنچ کے دوسرے ارکان جسٹس ایس اے بوبڑے، جسٹس ڈی وائی چندر چوڈ، جسٹس اشوک بھوشن اور جسٹس عبد النذیر ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close