تازہ ترین خبریںدلی نامہ

اتحاد میں کانگریس نے بہت دیر کر دی، اب اپنے دم پر لڑے گی’آپ‘: گوپال رائے

280 عوامی ریلیوں سمیت نکڑ سبھائیں، پیدل مارچ اور ڈور ٹو ڈور عوامی رابطہ کریں گے کارکنان اور لیڈران

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
دہلی میں عام آدمی پارٹی اور کانگریس کے ممکنہ اتحاد کی گردش کر رہی خبروں پر عام آدمی پارٹی کے دہلی کے کنوینر گو پال رائے نے دو ٹوک کہا کہ اتحاد کے معاملے میں کانگریس نے بہت دیر کر دی ہے، ابپارٹی اپنے دم پر الیکشن لڑے گی، جس کےلئے ہولی کے بعد انتخابی مہم تیز کر دی جائے گی۔

عام آدمی پارٹی کے سینئر لیڈر اور دہلی کے کنوینرگوپال رائے نے آج پارٹی دفتر میں منعقدہ پریس کانفرنس میں واضح کیا کہ لوک سبھا الیکشن کےلئے عام آدمی پارٹی نے دہلی کے اپنے ساتوں امیدواروں کے ناموں کا اعلان کر دیا ہے۔ ہولی کے بعد عام آدمی پارٹی اپنی الیکشن مہم کو تیز کرنے کا پلان بنا رہی ہے۔ کانگریس کے ساتھ اتحاد پر انھوں نے کہاکہ گزشتہ کئی ماہ سے عام آدمی پارٹی اور کانگریس سے اتحاد کی خبریں آتی رہی ہیں، لیکن جس طرح سے کئی ماہ سے کانگریس نے بار بار اتحاد کرنے سے انکار کیا ہے وہ اس بات کو ظاہر کرتا ہے کہ کانگریس اس ملک میں موجودہ حالات میں مودی اور شاہ کی ہٹلر شاہی کو ہرانے میں دلچسپی نہیں رکھتی بلکہ اپنی پارٹی بچانے میں زیادہ دلچسپی لے رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے غیر اعلانیہ ایمرجنسی کے خلاف اتحاد میں شامل ہونے کا فیصلہ لیا تھا۔ دہلی میں کانگریس کے ساتھ اختلافات کے باوجود مل کر الیکشن لڑنے کا فیصلہ لیا تھا۔ مگر کانگریس کے رویہ سے دہلی میں بی جے پی مخالف مہم ٹھہر سی گئی ہے۔ سارے معاملہ پر غور کرنے کے بعد فیصلہ لیا ہے کہ ہم اپنے دم اور عوام کے ساتھ مل کر بی جے پی کو ہرانے کی سمت میں آگے بڑھیں گے۔ گو پال رائے نے کہاکہ اب عوام کے ساتھ مل کر بی جے پی کو ہرانے کےلئے 23مارچ سے تحریک شرو ع کریں گے۔ انھوں نے بتایا کہ 23 مارچ کو صبح گیارہ بجے روڈشو مغربی دہلی میں شروع ہوگا اور راجوری گارڈن میں ختم ہوگا۔ شام کو سات بجے شکور بستی میں وزیراعلی کی عوامی ریلی ہوگی۔ 23مارچ سے 7اپریل تک پہلا مرحلہ ہوگا۔ 8 اپریل سے 30 اپریل تک دوسرا مرحلہ ہوگا۔

23 سے 7 اپریل تک وزیراعلی کی 35 ریلی ہوں گی۔ دوسرے مرحلہ میں بھی 35 عوامی ریلیاں ہوں گی۔ ہر اسمبلی میں ایک عوامی جلسہ ہوگا۔ وزیرا علی کی ریلی کے ساتھ پہلے مرحلہ میں میری(گوپال رائے)، سنجے سنگھ کی 26 اور منیش سسودیا کی 17ریلیاں ہوں گی۔ دونوں مرحلے ملا کر کل 280 عوامی ریلیوں کا انعقاد پارٹی کرے گی۔ اس کےلئے عوامی ریلی کے ساتھ سبھی اراکین اسمبلی کی ہر پولنگ اسٹیشن پرکل تین ہزار نکڑ سبھا ہوں گی، جہاں رکن اسمبلی نہیں ہیں وہاں کونسلر یا اسمبلی کے اسپیکر نکڑسبھا کریں گے۔ انھوں نے بتایا کہ ہم نے 260زون میں دہلی کو تقسیم کیا ہے۔ پہلا مرحلہ ختم ہونے کے بعد 8 اپریل سے ان زونوں میں وارڈ صدر اور سنگھٹن منتری کی قیادت میں پیدل مارچ ہوگا۔ اس کے دوران مکمل ریاست کے تعلق سے لوگوں کو بتایا جائے گا نیز گھر گھر جاکر دستک دیں گے۔ گو پال رائے نے کہاکہ اس کے ساتھ دہلی میں جتنے بھی نکڑ اور عوامی ریلی ہوں گی سبھی جگہوں پر ایل ای ڈی، پروجیکٹر کے ذریعہ وزیراعلی کی تقریر کا شو بھی کریں گے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close