تازہ ترین خبریںدلی این سی آر

’آپ‘ کونسلر وجیندر یادو نے جھاڑو چھوڑ کر تھاما پھول

ہر تیسرے دن جھیلنا پڑتا تھا اروند کجریوال کی نوٹنکی، گھٹن ہو رہی محسوس: وجیندر یادو

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
دہلی میں برسر اقتدار عام آدمی پارٹی کو لوک سبھا انتخابات سے ہی ایک کے بعد ایک جھٹکے لگ رہے ہیں۔’آپ‘ ارکان اسمبلی کی بغاوت اور کئی ارکان اسمبلی کے بی جے پی میں شامل ہونے کے بعد آج عام آدمی پارٹی کو ایک اور جھٹکا لگا ہے۔ شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے بختاور وارڈ 2 سے عام آدمی پارٹی کے کونسلر وجیندر یادو نے جھاڑو چھوڑ کر کمل کا پھول تھام لیا ہے۔ وہ آج بی جے پی میں شامل ہو گئے ہیں۔

بی جے پی کے ریاستی صدر منوج تیواری اور شمال مغربی دہلی سے ممبر پارلیمنٹ ہنس راج ہنس کی موجودگی میں کونسلر وجیندر یادو نے ریاستی دفتر میں بی جے پی میں شمولیت اختیار کی۔ اس موقع پر کونسلر وجیندریادو نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کے کام سے متاثر ہوکر میں بی جے پی میں شامل ہوا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ اروند کجریوال کی نوٹنکی ہر تیسرے دن جھیلنا پڑتا تھا اور میں پارٹی کے اندر گھٹن محسوس کر رہا تھا۔ اب اس سے چھٹکارا مل گیا اور میں آزاد ہوکر بی جے پی میں آ گیا ہوں۔ انہوں نے دہلی حکومت کی پالیسیوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ کجریوال حکومت کی پالیسیوں کی منفی پالیسیوں کی وجہ سے میں آج بی جے پی میں آیا ہوں۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ پارٹی میں کئی اور بھی ممبر اسمبلی اور دیگر لیڈر ہیں جو عام آدمی پارٹی کو چھوڑنا چاہتے ہیں۔

دہلی حکومت کی منفی پالیسیوں کی وجہ سے کارپوریشن کے کام رکے ہوئے ہیں۔ بی جے پی کے ریاستی صدر منوج تیواری نے ایم پی ہنس راج ہنس کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ ہنس نے رکن پارلیمنٹ بنتے ہی اپنا کام شروع کر دیا ہے، کوئی بھی شخص جسے محسوس ہوتا ہے کہ وہ ’آپ‘ کی قید میں ہے، تو وہ بی جے پی میں شامل ہو سکتا ہے، ہمارے دروازے ان کیلئے کھلے ہیں۔ ’آپ‘ میں لوگ تبدیلی کے لئے شامل ہوئے تھے لیکن اب وہ وہاں قید ہوکر رہ گئے ہیں۔ رکن پارلیمنٹ ہنس راج نے کہا کہ ’آپ‘ کی شروعات تو اچھی ہوئی لیکن جھوٹ کی بنیاد پر کھڑی ہونے والی یہ پارٹی غریبوں کے حق کو مارنا چاہتی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close