اپنا دیشتازہ ترین خبریں

آرٹیکل 370 کی منسوخی پر ممتا بنرجی کا دو دن بعد سامنے آیا ردعمل

گزشتہ دو دنوں کی خاموشی کے بعد آج وزیرا علیٰ ممتا بنرجی نے آج کہا ہے کہ آرٹیکل 370 کی منسوخی غیر جمہوری اور غیر آئینی ہے۔ مرکز کے اس قدم سے جموں وکشمیر میں حالات بہتر ہونے کے بجائے خراب ہوں گے۔

جموں وکشمیر کی صورت حال پر گزشتہ دو دنوں سے ممتا بنرجی کی خاموشی پر سوال اٹھ رہے تھے۔ سیاسی تجزیہ نگاروں ش کا ماننا ہے کہ لوک سبھا انتخابات میں کراری شکست کے بعد ممتا بنرجی کی سیاسی حکمت عملی میں تبدیلی آئی ہے اور یہ خاموشی بھی اسی کا حصہ ہے تاہم راجیہ سبھا میں جموں وکشمیر کی تقسیم کو لے کر بل پاس ہونے کے 24 گھنٹے کے بعد ممتا بنرجی نے اپنی زبان کھلی ہے۔

ممتا بنرجی جو آج چنئی کے سفر پر ہیں نے کہا ہے کہ جموں وکشمیر بل پر میرت پر سوال اٹھانے سے کہیں زیادہ اس بل کو جس انداز اور طریقے سے پیش کیا گیا ہے وہ غلط ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی بھی اقدام کرنے سے قبل مرکزی حکومت کوملک کی تمام سیاسی جماعتوں، کشمیر کی سیاسی جماعتوں اور دیگر اسٹاک ہولڈروں کو اعتماد میں لینے کی ضرورت ہے۔

کشمیر کے سیاسی لیڈران جس میں سابق وزرائے اعلیٰ فاروق عبداللہ، عمرعبداللہ اور محبوبہ مفتی ہیں کو حراست میں رکھا گیا ہے۔ جب کہ یہ لیڈران ملک کے وفادار ہیں اور کوئی دہشت گرد نہیں ہے۔ سوال یہ ہے کہ آخر انہیں گرفتار کیوں کیا گیا ہے۔ ممتا بنرجی نے کہا کہ غیر جمہوری اقدامات ملک میں اطمینان کی فضا پیدا کرنے کے بجائے حالات کو مزید خراب کریں گے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close