اپنا دیشتازہ ترین خبریں

آج پھر سے بڑھی پٹرول ڈیزل کی قیمت، 22 اکتوبرکو دہلی میں بند رہیں گے تمام پیٹرول پمپ

عالمی سطح پر خام تیل کی قیمتوں میں مسلسل دوسرے دن بڑی کمی کے درمیان آج ملک میں پٹرول ڈیزل کے دام ایک بار پھر بڑھ گئے۔ چار میٹروپولیٹن شہروں- دہلی، کولکتہ، ممبئی اور چنئی میں ڈیزل 27 سے 29 پیسے اور پٹرول 9سے 11 پیسے فی لیٹر کے درمیان مہنگا ہوگیا۔ اس میں ڈیزل کے دام لگاتار چھٹے دن بڑھے ہیں۔

ملک کی سب سے بڑی تیل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق، قومی دارالحکومت دہلی میں آج پٹرول 10 پیسے مہنگا ہوکر 82.36 روپے اور ڈیزل 27 پیسے مہنگا ہوکر 74.62 روپے فی لیٹر تک پہنچ گیا۔ کولکتہ میں بھی پٹرول کی قیمت 10 پیسے اور ڈیزل کے 27 پیسے بڑھ کر بالترتیب 84.19 روپے اور 76.47 روپے فی لیٹر فروخت ہورہاہے۔ ممبئی میں پٹرول نو پیسے اور چنئی میں 11 پیسے مہنگا ہوکر بالترتیب 87.82 روپے اور 85.61 روپے فی لیٹر ہوگیا ہے۔ دونوں شہروں میں ڈیزل کے دام 29-29 پیسے بڑھ کر بالترتیب 78.22 روپے اور 78.90 روپے فی لیٹر فروخت ہورہاہے۔

آپ کی جانکاری کے لئے بتا دیں کہ اتر پردیش اور ہریانہ میں ویٹ کی گراوٹ کے بعد پٹرول-ڈیزل کی فروخت کی کمی ہونے سے پریشان پٹرولیم ڈیلرز نے ایک دن ہڑتال کرنے کا فیصلہ کیا ہے. جس کی وجہ سے راجدھانی میں قریب 400 پیٹرول پمپ 22 اکتوبر کو بند رہیں گے. ڈیلرز کا دعویٰ ہے کہ دلی میں پٹرول-ڈیزل 2.50 روپے فی لیٹرمہنگا ہونے کی وجہ سے ان کے فروخت میں 40-50 فیصد کمی آئی ہے.

دلی پٹرولیم ڈیلرز ایسوسی ایشن کی مینجنگ کمیٹی نے بدھ کو ہی میٹنگ میں ہڑتال کرنے کا فیصلہ کیا ہے. ایسوسی ایشن کے صدر نشل سنگھا نیہ نے بتایا کہ "ہم دہلی حکومت پر ویٹ کی شرح کو کم کرکے اتر پردیش اور ہریانہ کے برابری پر کرنے کا مطالبہ کررہے ہیں، لیکن ابھی تک حکومت کی طرف سے کوئی مثبت رجحان نہیں ملا ہے. کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ دارالحکومت کے تمام پمپ 22 اکتوبر کی صبح 6 بجے سے اگلے 24 گھنٹوں تک بند رہیں گے اور پٹرول ڈیزل کی کوئی فروخت نہیں ہوگی.

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close