اپنا دیشتازہ ترین خبریں

آئینی ذمہ داریاں نبھانے میں ناکام رہا انتخابی کمیشن: کانگریس

کانگریس نے الیکشن کمیشن پر وزیراعظم نریندر مودی اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) صدر امت شاہ کے اشارے پر کام کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ کمیشن کی خودمختاری اور معتبریت سوالوں کے گھیرے میں ہے اس لیے کمیشن کی تقرری کے عمل پر ازسرنو غور کرنے کی ضرورت ہے۔

کانگریس کے ترجمان رندیپ سنگھ سرجے والا نے جمعرات کو پارٹی ہیڈ کوارٹر میں منعقد خصوصی پریس کانفرنس میں کہا کہ مودی حکومت نے انتخابی کمیشن کی آوازکودبایاہے اور کمیشن میں بیٹھے لوگ اپنی آئینی ذمہ داریاں نبھانے یں ناکام رہے ہیں ۔ انھوں نے کہاکہ ’’آیوگ نے آّدرش چناؤ آّچار سنہیتا کو مودی پرچار سنہیتا بنادیاہے اور اپوزیشن کے ساتھ سوتیلا برتاؤکیاجارہاہے ،اس لیے کمیشن کی تقرری کے عمل پر ازسرنوغورکرنے کی ضرورت ہے ۔‘‘انھوں نے کہاکہ مرکز میں کانگریس کی حکومت بننے پر اس معاملہ پر سنجیدگی سے غور کیاجائیگا۔

مغربی بنگال میں مقررہ وقت سے 24 گھنٹے پہلے انتخابی مہم پر پابندی لگانے کے کمیشن کے فیصلہ کو انھوں نے غلط بتایا اور کہاکہ کمیشن کا یہ فیصلہ ملک کی جمہوریت کے لیے سیاہ داغ ہے۔ اس حکم سے آئین کی دفعات 324 اور 14 اور 21 کی اہمیت کم ہوئی ہے۔ کمیشن کا یہ فیصلہ وزیراعظم کے لیے ایک تحفہ جیسا ہے کیونکہ انتخابی مہم بند ہونے سے عین پہلے مسٹر مودی کی مغربی بنگال کے متھرا پور اور دم دم میں انتخابی ریلیاں ہونی ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close